فرشتہ قتل کیس: پوسٹ مارٹم رپورٹ تیار

0
461

اسلام آباد:زیادتی و قتل کیس میں 11 سالہ بچی فرشتہ کی پوسٹ مارٹم رپورٹ تیار کر لی گئی، رپورٹ کے مطابق بچی کے پیٹ پر خنجر لگنے کا واضح نشان موجود ہے۔ ممکنہ طور پر بچی کی موت زیادہ خون بہنے کی وجہ سے ہوئی۔ پوسٹ مارٹم رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ فرشتہ کی آنکھیں، دماغ اور پاؤں جانوروں نے نوچ کھائے، بچی کے کہیں سے بھی کپڑے پھٹے ہوئے نہیں تھے۔ موت کو زیادہ وقت گزرنے کے باعث جسم میں کیڑے پڑ چکے تھے۔پوسٹ مارٹم رپورٹ میں مزید بتایا گیا ہے کہ کیڑے پڑنے کی وجہ سے بچی کے جسم سے شواہد اکٹھے نہیں ہو سکتے۔ ڈاکٹروں کی رائے پوسٹ مارٹم سے شواہد نہ ملنے کے بعد پولیس نے تمام امیدیں ڈی این اے رپورٹ پر مرکوز کر لی ہیں۔ فرشتہ کی ڈی این ای رپورٹ کل پولیس کو موصول ہونے کا امکان ہے،اُدھر زیادتی کے بعد قتل کی گئی فرشتہ کیس کی تحقیقات میں پیشرفت ہوئی ہے۔ پولیس ہمسائے افغان باشندے کی گرفتاری کو اہم قرار دے رہی ہے۔ذرائع کے مطابق پولیس کی اب تک کی تحقیقات میں بتایا گیا ہے کہ 15 مئی کی شام فرشتہ والدہ کو دوست وفا کے گھر جانے کا کہہ کر نکلی مگر جیو فینسنگ کے مطابق وہ اپنی دوست کے گھر پہنچی ہی نہیں۔ کیس کی سب سے اہم گرفتاری اس کے ہمسائے افغان باشندے ناصر کی ہے۔ لاش برآمد ہونے والی جگہ سے ایک ایسے شخص کو بھی گرفتار کیا گیا جو کہ گجر خان میں ایک خاتون کے قتل میں ملوث تھا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ فرشتہ کے گھر کے اطراف میں اب تک پچاس گھروں کا سروے کیا گیا ہے جبکہ جائے وقوعہ سے جوس کا ڈبہ اور گلاس بھی ملے تھے

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here