وزرائے اعلیٰ خود کو بادشاہ سمجھتے ہیں

0
157

وفاقی وزیرسائنس وٹیکنالوجی فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ مسئلہ پنجاب حکومت کا نہیں وسائل کی تقسیم کا ہے، وزرائے اعلیٰ خود کو بادشاہ سمجھتے ہیں یہ عوامی مفاد کے خلاف ہے ۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک بیان میں وفاقی وزیرسائنس وٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا کہ وزرائے اعلیٰ کےپاس صوابدیدی فنڈ آرٹیکل اے140 کی خلاف ورزی ہے ۔
انہوں نے کہا کہ جس فارمولے کے تحت وفاق فنڈز صوبوں کو دیتا ہے اسی طرح اضلاع میں فنڈز تقسیم بھی ہونے چاہیے دوسری جانب وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی)کی کور کمیٹی اجلاس میں پنجا ب حکومت کی کارکردگی پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب ڈلیور نہیں کر پا رہا جس کے باعث پارٹی کو مجموعی طور پر دباؤ کا سامنا ہے ۔
ذرائع کے مطابق پی ٹی آئی کے کور کمیٹی اجلاس میں فواد چوہدری نے اعتراض کیا کہ پنجاب میں نہ تو سیاسی سائیڈ ڈلیور کر رہی ہے اور نہ ہی انتظامی سائیڈ کی کارکردگی اچھی ہے۔وفاقی وزیر نے کور کمیٹی اجلاس میں انکشاف کیا کہ پنجاب کا 350 ارب کا ترقیاتی بجٹ ہے جبکہ ریلیز صرف 77ارب روپے ہوئے ہیں ۔انہوں نے پنجاب حکومت پر برستے ہوئے کہا کہ پنجاب، پروانشل فنانس ایوارڈ بھی اضلاع کو نہیں دے رہا، صوبائی سطح پر کچھ ہو رہا ہے نہ اضلاع کو فنڈز منتقل ہو رہے ہیں ۔پی ٹی آئی کے کور کمیٹی اجلاس میں فواد چوہدری کی نشاندہی کے بعد وزیراعظم نے پنجاب حکومت کو صوبائی فنانس کمیشن ایوارڈ کے اجراء کا حکم دے دیا۔وزیر اعظم نے ہدایت کی کہ فوری طور پر صوبائی فنانس کمیشن ایوارڈ جاری کرکے اضلاع کو فنڈ ز منتقل کئے جائیں ۔اجلاس میں وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ وزیر اعظم عمران خان کی حکومت شاندار کام کر رہی ہے، تاہم پنجاب کی وجہ سے مرکز کو بھی تنقید کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی نے کہا کہ پنجاب کے ڈلیور نہ کرنے پر عوامی سیاسی محاذ پر پی ٹی آئی کی کارکردگی پر تنقید ہو رہی ہے،،۔بشکریہ روزنامہ جنگ

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here